Top Daily Quotes

Aik Deendar Badshah Ka Waqia

ایک دیندار بادشاہ کا واقعہ

Aik Den Dar Badshah ka Waqia 3 Top Daily Quotes

افغانستان کے سابق بادشاہ امیر محمد دوست جو بڑے خداترس نیک انسان تھے۔اُن کے زمانے میں کسی دوسرے بادشاہ نےافغانستان پر حملہ کر دیا انہوں نے اس کے مقابلے میں اپنے شہزادے کو فوج دے کر بھیج دیا۔چند دنوں کے بعد اُن کے کارندوں نےاُنہیں اطلاع دہ کہ آپکا بیٹادشمن کے مقابلے میں شکست کھا کر بھاگ گیا ہے۔اُنہیں بڑا صدمہ ہوا،جاکر اپنی اہلیہ کو یہ افسوناک خبر سُنائی لیکن اُن کی بیوی نےاس خبر کو تسلیم کر نے سے انکا ر کر دیا، بادشاہ کہہ رے ہیںکہ یہ خبر سچی ہےکیونکہ مجھے میرے خاص بندوں نےخبر دی ہے، بیوی کہہ رہی ہےکہ ایسا نہیں ہو سکتا کہ میرا بیٹا شکست کھا کرمیدان جنگ سے بھاگ جائے۔وہ یا تو شہید ہو گایا فتح پائے گا۔یہ بھاگنے والی بات میں کسی صورت ماننے کیلئے تیار نہیں۔ دوسرے دن بادشاہ کو باوثوق ذرائع سے اطلاع مل گئی کہ واقعی وہ شکست کھا کر بھاگنےخبر جھوٹی تھی ۔مگر تعجب اُنہیں اس بات پر تھاکہ آخر میری بیوی نے بغیرکسی تحقیق کےاتنے اعتماد کے ساتھ یہ بات کیسے کہہ دی تھی کہ میرا بیٹا شکست کھا کربھاگ نہیں سکتا جب بیگم سے پوچھاتو پہلے تو وہ بتلانے میں پس و پیش کرتی رہی پھر کہنے لگیں۔ اصل بات یہ ہے کہ جب یہ میرے پیٹ میں تھا میں نے اللہ رب العزت سے عہد کیا تھا کہ جب تک یہ میرے پیٹ میں ہے ان نو مہینوں میں ایک مشکوک لقمہ بھی اپنے پیٹ میں نہیں ڈالوں گی صرف اور رزق حلال ہی میرے پیٹ میں جائے گا۔اس کہ ناپاک کمائی سے خون بھی ناپاک پیدا ہوتا ہےاور ناپاک خون سے اخلاق بھی گندے اور ناپاک پیدا ہوتے ہیں ۔اور دوسری بات جس کا میں نے بہت دھیان رکھا وہ یہ تھی کہ میں جب بھی اسے دودھ پلا نے لگتی تھی وضو کر کے دو رکعت نفل پڑھ کر اور اللہ رب العزت سے دعا مانگ کر اسے دودھ پلاتی تھی۔ان دو باتو کی وجہ سے مجھے یقین تھا کہ میرا بیٹا بزدل اور کمینہ نہیں ہوسکتا وہ فاتح بن سکتا ہے وہ سینے پر زخم کھا کےشہادت کا مرتبہ حاصل کر سکتا ہے مگر پشت پر زخم کھا کر بھاگ نہیں سکتا۔

مزید واقعات پڑہیں